Muhasiba

شعبہ محاسبہ

1- ہر مجلس اپنے ہاں ایک محاسب مقرر کرے جو ہر ماہ اپنی مجلس کے جملہ حسابات آمدوخرچ چیک کرے اور بے قاعدگیوں سے متعلق قائد مجلس کو رپورٹ کرے اور اس کی نقل مرکز ارسال کرے۔ نیز سال کے اختتام پر آمد وخرچ کا سالانہ گوشوارہ تیار کر کے مرکز بھجوائے اگر ابھی تک کسی مجلس نے یہ رپورٹ نہ بھجوائی ہو تو وہ فوری طور پر ارسال فرماویں۔
2- ہر ضلعی محاسب ضلعی حسابات کی ہر سہ ماہی میں اور ضلع کی تمام مجالس کے سال بھر میں دورے کر کے حسابات کی پڑتال کرے اور اپنی مفصل رپورٹ براہ راست صدر مجلس کی خدمت میں بصیغہ راز ارسال کرے۔
3- اسی طرح ہر محاسب علاقہ کا فرض ہے کہ وہ قیادت علاقہ کے حسابات کی اور دورے کر کے اپنے علاقہ کے سب اضلاع کے حسابات کی ہر سہ ماہی میں کم از کم ایک مرتبہ پڑتال کرے اور براہ راست صدر مجلس کی خدمت میں اپنی مفصل رپورٹ بصیغہ راز بھجوائے۔
4- وصولی عطیہ جات اور اخراجات کی پڑتال کی رپورٹ فوری طور پر مرکز ارسال کی جائے۔
5- ہر محاسب مجلس/ ضلع/ علاقہ کی اشیاء کا ریکارڈ رکھنے کیلئے سٹاک رجسٹر بنا کر رکھے۔
6- محاسب اس امر کی بھی خصوصی نگرانی کرے کہ مرکز سے وصول شدہ رسید بکس کا مجالس/ حلقہ جات کو اجراء اور ان کے مکمل ہونے کے بعد مرکز کو واپسی کا باقاعدہ ریکارڈ ایک الگ رجسٹر پر محفوظ رکھا جائے اور تمام مدات میں وصول شدہ رقوم ہر ماہ کی بیس تاریخ تک مرکز ارسال کر دی جائیں۔
7- محاسب حسابات کی پڑتال کرتے ہوئے مندرجہ ذیل امور بطور خاص پیش نظر رکھیں۔
(i) کوئی رسید بلا تفصیل نہ ہو یعنی تفصیل سے یہ درج کیا جائے کہ کس مد میں کتنی رقم وصول کی گئی ہے۔
(ii) خدام کی رسید بک پر خدام و اطفال کے لازمی چندہ جات کے علاوہ دیگر جماعتی چندہ جات، وقف جدید یا کسی اور ذیلی تنظیم کا چندہ بالکل وصول نہ کیا جائے۔
(iii) ہر رسید کا اندراج روزنامچہ میں ہو گیا ہو۔
(iv) مرکز کا تجویز کردہ کھاتہ اور روزنامچہ مکمل ہو۔